شام: روسی اور ایرانی فورسز کی حلب اور الغوطہ کی جانب پیش قدمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

شامی اپوزیشن کے مذاکراتی وفد کے سربراہ اسعد الزعبی نے "الحدث" نیوز چینل کے ساتھ گفتگو میں انکشاف کیا ہے کہ روسی فوج نے الغوطہ میں شامی اپوزیشن کو مصروف رکھنے کی منصوبہ بندی کی ہے تاکہ وہ حلب پر حملہ کر سکے۔

انہوں نے واضح کیا کہ روسی منصوبے کے تحت 3 ہزار ایرانی فوجیوں کو دمشق کے نواحی علاقے میں الغوطہ کے شمال کی جانب بڑھایا جائے گا۔

الزعبی کے مطابق اس منصوبے کو شامی حکومت کے اندر ایک ایجنٹ نے اپوزیشن کے لیے افشا کیا جس کے مطابق حزب اللہ، ایرانی عناصر اور شامی حکومت کی فوج کے گروپوں پر مشتمل فورسز الغوطہ کے شمال میں جمع ہوں گی۔

اپوزیشن وفد کے سربراہ نے یہ بھی بتایا کہ روسی فوج حمیمیم کے فوجی اڈے سے حلب کی جانب پیش قدمی کر رہی ہے۔

الزعبی نے باور کرایا کہ حلب میں جنگ بندی کی بات بے فائدہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ "حلب میں کوئی جنگ بندی ہے ہی نہیں جو اس میں توسیع کی جائے"۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں