شامی فوج کا دمشق کے قریب داریا میں بڑا زمینی حملہ

شہر پر زمین سے زمین پر مار کرنے والے میزائلوں سے بھی حملے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

شام کی سرکاری فوج اور اس کی حامی ملیشیا نے جنگ بندی معاہدہ توڑتے ہوئے دارالحکومت دمشق کے نواحی علاقے داریا پر زمینی حملہ کیا جس میں بھاری توپخانے اور ٹینکوں کے ذریعے گولہ باری کی جا رہی ہے۔

الحدث نیوز چینل نے شام کے امدادی کارکنوں کے حوالے سے بتایا ہے کہ اسدی فوج اور اس کی حامی ملیشیا نے گذشتہ روز داریا کا محاصرہ کیا اور جنگ بندی توڑتے ہوئے شہر پر ٹینکوں اور ت پ خانے سےحملہ کردیا۔ شامی فوج کے سیکڑوں اہلکار اور ان کے حامی جنگجو بکتر بند گاڑیوں اور سرنگیں صاف کرنے والی مشینوں کے ساتھ داریا میں پیش قدمی کر رہے ہیں۔

ذرائع کے مطابق داریا کی جنوبی سمت سے اسدی فوج نے شہر پر چڑھائی شروع کی ہے۔ توپ خانے سے گولہ باری کے ساتھ ساتھ زمین سے زمین پر مار کرنے والے میزائل حملے بھی جاری ہیں جب کہ دوسری جانب شامی اپوزیشن کی نمائندہ فوج جیش الحر نے اسدی فوج کے حملے اور فوج کی چڑھائی روکنے کے لیے جوابی کارروائی شروع کردی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں