کم سن داعشی جلادوں کے ہاتھوں دو افراد کا سرقلم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

عالمی دہشت گرد تنظیم کی جانب سے کم سن بچوں کو دہشت گردی کی مذموم تعلیم دینے کے ساتھ ساتھ انہیں مخالفین کے قتل میں استعمال کرنے کی مکروہ سازشیں بھی جاری ہیں۔ سوشل میڈیا پر سامنے آنے والی ایک تازہ ویڈیو ٹیپ میں شام میں دو کم سن داعشی جلادوں کو یرغمال بنائے گئے دو شامی شہریوں کو گولیاں مار کر ہلاک کرتے دکھایا گیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق کم سن داعشی جنگجوؤں کے ہاتھوں دو افراد کے قتل کی فوٹیج سماجی رابطے کی ویب سائیٹس فیس بک اور ٹویٹر پر پوسٹ کی گئی ہے۔

برطانوی اخبار ڈیلی میل کے مطابق یہ واقعہ شام کے شورش زدہ شہر حلب میں پیش آیا اور قاتل داعشی کم سن جلادوں کا تعلق فرانس سے ہے۔ انہیں داعش کے ہاں اسلحے کے استعمال کی باقاعدہ تربیت دی گئی جس کے بعد ان کے ہاتھ سے دو افراد کو موت کے گھاٹ اتارا گیا ہے۔

فوٹیج میں کم سن داعشی جلاد یرغمال بنائے گئے دو شامی شہریوں جنہیں مبینہ طور پر جاسوس قرار دیا گیا ہے 'بسم اللہ' پڑھ کر گولیاں مارتے دکھایا گیا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں