نیتن یاہو سے اختلافات ،اسرائیلی وزیردفاع مستعفی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیل کے وزیر دفاع موشے یعلون نے اپنے عہدے سے مستعفی ہونے کا اعلان کیا ہے اور کہا ہے کہ انھیں وزیر اعظم بنیامین نیتن یاہو پر کوئی اعتماد نہیں رہا ہے۔

موشے یعلون نے ٹویٹر پر جمعہ کو لکھا ہے:''میں نے وزیر اعظم کو اپنے فیصلے سے آگاہ کردیا ہے کہ ان کے اقدام اور حالیہ پیش رفت کے بعد مجھے آپ پر یقین نہیں رہا ہے اور میں حکومت اور پارلیمان کی رکنیت سے مستعفی ہورہا ہوں اور سیاسی زندگی میں ایک وقفہ لے رہا ہوں''۔

بنیامین نیتن یاہو نے اپنی مخلوط حکومت میں توسیع کرتے ہوئے ایک روز قبل ہی انتہا پسند یہودی لیڈر آوی گیڈور لائبرمین کو اسرائیل کا وزیردفاع نامزد کیا ہے۔ان کے اس فیصلے کے بعد موشے یعلون کے لیے نیتن یاہو کی کابینہ میں مزید کام کرنا ممکن نہیں رہا تھا۔مسٹر لائبرمین فلسطینیوں کے بارے میں سخت موقف کے حامل ہیں اور وہ مقبوضہ مغربی کنارے میں یہودی بستیاں برقرار رکھنے بلکہ ان میں توسیع دینے کے حامی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں