.

فلوجہ سے 2 کلومیٹر دور داعش کے خلاف جنگ جاری

مشترکہ فوج کی جانب سے پہلے مرحلے پر شہر کے محاصرے کا دعوی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

عراق کے عسکری ذرائع کے مطابق عراقی فوج اور ایرانی حمایت یافتہ الحشد الشعبی نامی ملیشیا کے کارکنوں کی داعش کے جنگجووں سے جھڑپیں ہوئی ہیں۔ اطلاعات کے مطابق یہ جھڑپیں فلوجہ سے دو کلومیٹر دور ہوئیں۔

عراق میں مشترکہ آپریشن کے ترجمان کرنل یحی الزبیدی نے اسی سلسلے میں بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ مشترکہ فوج پہلے مرحلے میں فلوجہ کا مکمل محاصرہ کرنے میں کامیاب ہوئی ہیں۔

الانبار کے قبائل پر مشتمل ملیشیا نے عامریہ الفلوجہ میں متعدد دیہات کا کنٹرول واپس لینے کا اعلان کیا ہے۔ فوجی کمان کا کہنا ہے کہ قبضہ واپسی کی جنگ میں خاطر خواہ پیش رفت دیکھنے میں آئی ہے۔

فوج اور قبائلی ملیشیا کی جانب سے داعش سے واگزار کرائے جانے والے علاقوں کو محفوظ بنایا جا رہا ہے۔ نیز مغربی محاذ پر الخالدیہ گاوں کا کنٹرول حاصل کرنے کی بھرپور کوشش بھی جاری ہے۔