مکہ مکرمہ: ماہ صیام میں خوراک کے پانچ ملین پیکٹ کی تقسیم کا پلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

مکہ مکرمہ کی مقامی حکومت نے پیش آئند ماہ صیام کے دوران روزہ داروں کی سحری اور افطاری کے لیے تیار کردہ خشک خوراک پر مشتمل 50 لاکھ پیکٹ تقسیم کرنے کا اعلان کیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق مکہ معظمہ کے گورنر اور خادم الحرمین الشریفین کے مشیر شہزادہ خالد الفیصل کی موجود گی میں کمیٹی برائے آب رسانی و ردفادہ اور محکمہ تعلیم کے درمیان باہمی تعاون کے ایک معاہدے پر دستخط کئے گئے جس کے تحت محکمہ تعلیم ماہ صیام کے ایام میں راشن کی تقسیم کے لیے 250 اساتذہ اور اسکاؤٹس کے طلباء کی خدمات فراہم کرے گا۔ معاہدے پر فراہمی آب کمیٹی کے چیئرمین ڈاکٹر ھشام الفالح اور محکمہ تعلیم کے ڈائریکٹر جنرل برائے مکہ محمد بن مہدی الحارثی نے دستخط کیے۔

ڈاکٹر الفالح نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ مکہ گورنری نے ماہ صیام میں پانچ ملین سے زاید خوراک کے پیکٹ مفت تقسیم کرنے کا پلان تیار کیا ہے۔ راشن میں افطاری کا خشک سامان شامل ہوگا جب کہ مسجد حرام اور دیگر مساجد میں گرم اور تازہ خوراک بھی تقسیم کی جائے گی۔ حکومت کی طرف سے تیار کردہ خشک راشن مکہ کی مختلف کالونیوں، رمضان کیمپوں، بس اسٹیشنوں، مکہ معظمہ میں قائم چیک پوسٹوں، ایمرجنسی سروزسز کے مراکز، اسپتالوں، شاہ عبدالعزیز ہوائی اڈے اور جدہ بندرگاہ پر موجود روزہ داروں میں تقسیم کیا جائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں