جازان: سعودی فوج کی یمنی باغیوں کے ٹھکانوں پر گولہ باری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کی مشترکہ فوج کے توپخانے نے جمعہ اور ہفتہ کی درمیانی شب جنوبی سعودی عرب کے علاقے جازان پر گولا باری کی. یہ اقدام سعودی عرب کے سرحدی علاقوں پر یمنی انقلابیوں کے بلا اشتعال گولا باری کے جواب میں کیا گیا.

سعودی فوج نے ان حوثی ٹھکانوں پر کامیابی سے حملے کئے جو انہوں نے سعودی سرحد کے قریب گولا باری کے لیے قائم کرنے کی کوشش کی تھی.

ادھر سیاسی محاذ پر کویت میں یمنی حکومت اور انقلابیوں کے درمیان 15 جولائی تک معطل مشاوراتی عمل کے بارے یمنی حکومت کے وفد نے اس امر کا اعادہ کیا ہے کہ وہ مذاکرات کے لئے طے شدہ عمومی ضابطہ کار اور فریم ورک پر کاربند ہے.

یمنی حکومت کے ترجمان راجح بادی کا کہنا ہے کہ بحران اپنی آخری حد تک پہنچ چکا ہے. یمنی معاشرے کے لئے صرف دو آپشن باقی ہیں کوئی تیسرا راستہ نہیں ہے. پہلا راستہ مستقل امن کا قیام ہے تا کہ باغی ملیشیاؤں کو مستقل عمل قبول کرنے پر مجبور کیا جا سکے، جبکہ دوسرا راستہ کسی بھی طریقے بشمول طاقت کے زور پر حکومتی رٹ کی بحالی ہے.

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں