موصل کو چھڑانے کے لیے البیشمرکہ بھی جنگ کے لیے تیار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

عراق کے صوبہ کردستان کی البیشمرکہ فوج نے بھی جون سنہ 2014ء سے شدت پسند گروپ دولت اسلامی ’داعش‘ کے زیرتسلط عراق کے دوسرے بڑے شہر موصل کو آزاد کرانے کے لیے جاری آپریشن میں شمولیت کی تیاری کررہی ہے۔

العربیہ ٹی وی کے مطابق اگر البیشمرکہ موصل کو آزاد کرانے کے معرکے میں شامل ہوتی ہے تو اسے شہر کے شمال مشرقی محاذ سے آپریشن کا موقع دیا جائے گا جب کہ عراقی فوج شہر کے جنوب سے کارروائی شروع کرے گی۔

خیال رہے کہ کردستان کی فوج کا داعش کے خلاف لڑائی میں شمولیت کا اعلان ایک ایسے وقت میں سامنے آیا ہے جب امریکا نے بھی بغداد کو 560 اضافی فوجیوں کی کمک بھجوانے کا اعلان کیا ہے۔ امریکی وزیر دفاع آشٹن کارٹر نے ایک بیان میں کہا ہے کہ واشنگٹن نے داعش کی سرکوبی اور موصل کو جنگجوؤں سے آزاد کرانے میں بغداد کی معاونت کے لیے جلد ہی پانچ سو ساٹھ فوجی عراق روانہ کئے جائیں گے جس کے بعد عراق میں تعینات امریکی فوجیوں کی تعداد 4600 ہو جائے گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں