یو اے ای میں مزدوروں کو فری رہائش ملے گی: حکومتی فرمان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

متحدہ عرب امارات میں کم تن خواہ پانے والے مزدوروں کے لئے خوشخبری ہے کہ پچاس سے زائد مزدوروں کی خدمات حاصل کرنے والی کمپنی اپنے عملے کو فری رہائش دینے کی پابند ہو گی۔ یو اے ای کی سرکاری خبر رساں ایجنسی 'وام' کے مطابق حکومت کے اس فرمان پر اس سال دسمبر سے عمل درآمد لازمی ہو گا۔

'وام 'کے مطابق اس سہولت سے وہ مزدور فائدہ اٹھا سکیں گے جن کا ماہانہ مشاہرہ دو ہزار اماراتی درہم سے کم ہے۔

متحدہ عرب امارات میں انسانی وسائل کے وزیر صقر غباش کے مطابق حکام کم تن خواہ پانے والے مزدوروں کے لئے بنائی گئی ان رہائش گاہوں کا باقاعدگی سے معائنہ کریں گے۔ ایسی رہائش گاہوں سے استفادہ کرنے والوں کی بڑی تعداد مرد حضرات کی ہوتی ہے۔

انہوں نے مزید بتایا کہ "کم تن خواہ پانے والے مزدوروں کے رہائشی حالات کا جائزہ لینے کے لئے انسانی وسائل کی وزارت پر مشتمل ماہرین نے کئی مہینے تک غور وخوض کیا۔ وزارت مزدوروں کے لئے مختص رہائش گاہوں کا معائنہ کرتی رہتی ہے۔ نامناسب سہولیات فراہمی کی صورت میں متعلقہ کمپنیوں کے خلاف قانونی چارہ جوئی بھی کی جاتی ہے۔"

واضح رہے کہ متحدہ عرب امارات کی 9.3 ملین آبادی کا اسی فیصد کم تن خواہ پانے والے نیم پیشہ ور مزدوروں اور گھریلو ملازمین پر مشتمل ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں