چینی مسلمان کی سائیکل پرحج کے لیے حجاز مقدس آمد

محمد ما پاؤچین نے 8 ہزار 150 کلو میٹر سفرسائیکل پر طے کیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ویسے تو ہرسال ہزاروں مسلمان دنیا کے کونے کونے سے فریضہ حج کی ادائی کے لیے حجاز مقدس پہنچتے ہیں مگربعض عازمین حج اپنے سفر کی انفرادیت کی وجہ سے عالمی توجہ کا مرکز بن جاتے ہیں۔ایسے ہی ایک مسلمان کا تعلق چین سے ہے جو سائیکل پر ہزاروں کلو میٹر کا سفرطے کرکے حج بیت اللہ کے لیے سعودی عرب پہنچ گئے ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق سعودی عرب کے ذرائع ابلاغ نے چین کے اس منفرد عازم حج محمد ما پاؤچین کے سفر کو غیرمعمولی کوریج دی ہے۔ پاؤچین نے تین ماہ قبل حج کے سفر کا آغاز چین کے علاقے شین جینگ سے کیا۔ موسمی تغیریات اور سفری صعوبتوں کو برداشت کرتے ہوئے وہ آخر کا اپنی منزل مقصود پر پہنچ گیا ہے۔

ماپاؤچین نے سائیکل پر اپنے ملک سے سفر شروع کیا۔ جہاں سے وہ پاکستان میں داخل ہوئے۔ اس کے بعد افغانستان، پھرایران اور عراق سے ہوتے ہوئے سعودی عرب پہنچے ہیں۔ ماپاؤچین کا کہنا ہے کہ چین سے پاکستان منتقلی کے بعد اس نے سعودی عرب کا ویزہ حاصل کیا کیونکہ ان کے پاس حج کا ویزہ نہیں تھا۔ حج کا ویزہ حاصل کرنے کے بعد اس نے سائیکل پر سفر شروع کیا، بحرین میں شاہ فہد پل عبور کرکے وہ دمام پہنچے جہاں سے ریاض، وہاں سے طائف اور پھر مکہ مکرمہ تک کل 8 ہزار 150 کلو میٹر کا سفر حج سائیکل پرطے کرکے ایک نیا ریکارڈ قائم کیا ہے۔

طائف پہنچنے پر چینی عازم حج کا مقامی شہریوں نے پرتپاک استقبال کیا۔ چینی مسلمان کا کہنا ہے کہ سائیکل پر اس کا طویل سفر کئی حوالوں سے یادگار رہے گا۔ اس نے راستے میں آتے ہوئے قدرتی حسن کے نظارے دیکھے مگر سعودی عرب کے تاریخی مقامات کی زیارت سے حاصل ہونے والا روحانی سکون ہمیشہ یادرہے گا۔

خیال رہے کہ چین میں مسلمان آبادی کی تعداد 26 ملین سے زائد ہے مگر ان میں سے صرف چند ہزار مسلمانوں کو ہرسال فریضہ حج کی ادائی کے لیے حجاز مقدس کے سفر کی اجازت دی جاتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں