.

صالح نے ملک کو "ایرانی آلہ کاروں" کے حوالے کیا : یمنی صدر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے صدر عبدربہ منصور ہادی نے باور کرایا ہے کہ ایران کے فرقہ وارانہ منصوبے کی یمنیوں کے درمیان کوئی گنجائش نہیں۔ انہوں نے یہ بات 1962 میں 26 ستمبر کے انقلاب کے 54 برس پورے ہونے پر اپنے خطاب میں کہی۔

ہادی کے مطابق علی عبداللہ صالح نے ملک کو ستمبر کے انقلاب کے دشمنوں کے حوالے کرنے میں جلدی کی۔ انہوں نے مزید کہا کہ معزول یمنی صدر نے نہ صرف ان دشمنوں کے ساتھ اتحاد کیا بلکہ ملک کو یمن میں موجود ایران کے آلہ کاروں کے حوالے کر دیا۔

منصور ہادی نے واضح کیا کہ حوثیوں اور ان کے حلیف صالح نے قومی منصوبے اور بات چیت کے نتائج کو مسترد کر کے آئین کی خلاف ورزی کا ارتکاب کرتے ہوئے حکومت کا تختہ الٹا۔ یہ ہی وہ ہی موقف ہے جس پر ان کے اسلاف نے 1948 میں عمل کیا تھا۔