داعش نے الرطبہ میں پانچ عراقیوں کو موت کی نیند سلا دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

عراق کے مغربی صوبے الانبار میں واقع شہر الرطبہ میں داعش کے جنگجوؤں نے سکیورٹی فورسز کے اہلکاروں سمیت پانچ افراد کو موت کی نیند سلا دیا ہے۔

داعش کے جنگجوؤں نے اردن کی سرحد کے نزدیک واقع تزویراتی اہمیت حامل اس شہر پر اتوار کو حملہ کیا تھا۔انھوں نے مختصر وقت کے لیے الرطبہ میئرکے دفتر پر بھی قبضہ کر لیا تھا۔بعد میں عراقی سکیورٹی فورسز نے انھیں وہاں سے نکال باہر کیا ہے لیکن وہ ابھی تک شہر کے بعض حصوں میں موجود ہیں۔

عراقی فوج کے ایک کرنل نے بتایا ہے کہ داعش کا الرطبہ کے وسطی حصوں میثاق اور انتصار پر کنٹرول برقرار ہے۔وہ عام شہریوں اور پولیس اہلکاروں کو پکڑ کر قتل کررہے ہیں۔انھوں نے اتوار کو پانچ افراد کو تہ تیغ کردیا تھا۔

الانبار کے آپریشنز کمانڈ کے سربراہ لیفٹیننٹ جنرل اسماعیل المہلاوی نے ان ہلاکتوں کی تصدیق کی ہے اور کہا ہے کہ عراقی فورسز شہر میں داعش کے خلاف لڑائی میں برتری حاصل کررہی ہیں۔آرمی کے آٹھویں ڈویژن کے یونٹوں اور الانبار آپریشنز کمانڈ کے ایک بریگیڈ کو کمک کے طور پرالرطبہ بھیج دیا گیا ہے تاکہ وہاں سے داعش کو نکال باہر کیا جا سکے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں