عراق : بعشیقہ میں داعش کے ٹھکانوں پر اتحادی بم باری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

عراق کے دوسرے سب سے بڑے شہر موصل کو دہشت گرد تنظیم داعش سے آزاد کرانے کے لیے مشترکہ عراقی فورسز کا آپریشن جاری دوسرے ہفتے میں داخل ہوچکا ہے۔ کارروائی میں عراقی فورسز کو بین الاقوامی اتحاد کی معاونت بھی حاصل ہے۔

بین الاقوامی اتحاد کے جنگی طیاروں نے موصل کے مشرق میں واقع قصبے بعشیقہ میں داعش کے ٹھکانوں کو بم باری کا نشانہ بنایا جب کہ پیشمرگہ فورسز نے قصبے کے اطراف اپنی پیش قدمی جاری رکھی۔

دوسری جانب انسداد دہشت گردی کے ادارے کہا کہنا ہے کہ اس کی فورسز موصل کے مشرقی داخلی راستے پر واقع علاقے کوکجلی کے مقابل گاؤں زوایہ کے اطراف پہنچ چکی ہیں۔

انسداد دہشت گردی کی خصوصی کارروائیوں کے کمانڈر معن السعدی نے انکشاف کیا ہے کہ داعش نے پہلی مرتبہ بھاری ہتھیاروں کا مسلسل استعمال کر رہی ہے۔

ادھر نینوی صوبے کی کونسل نے انکشاف کیا ہے کہ "داعش" تنظیم نے گزشتہ چند روز میں درجنوں قیدیوں کو موت کے گھاٹ اتارا ہے۔ مذکورہ افراد کو داعش نے اپنے سابقہ زیر قبضہ دیہات میں قیدی بنایا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں