.

ایران ، بغاوت اور دہشت گردی کے درمیان "رُسوا" اتحاد

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے صدر عبد ربہ منصور ہادی نے زور دے کر کہا ہے کہ باغی انقلابیوں کی جانب سے یمنی عوام پر مسلط کیے جانے والے تنازع اور جنگ کا تجربہ جس کی پشت پر ایران ہے. اس امر کو باور کراتا ہے کہ ایران اور اس کی حمایت یافتہ دہشت گرد جماعتوں کے درمیان کوآرڈی نیشن کا دائرہ کتنا وسیع ہے۔

صدر ہادی کے مطابق اس کی مثالیں بڑی تعداد میں موجود ہیں کہ یہ دہشت گرد جماعتیں باغی ملیشیاؤں کے مقابلے پر نہیں آئیں بلکہ انہوں نے حضرموت ، ابین ، الحوطہ اور دیگر علاقوں پر قبضہ کر کے بغاوت کے منصوبے کو معاونت کی۔

یمنی صدر نے ایک مرتبہ پھر سے خبردار کیا کہ ایران کئی برسوں سے اس بات کا خواہش مند ہے کہ آبنائے ہرمز اور آبنائے باب المندب پر اپنے آلہ کاروں کے ذریعے کنٹرول سے خطے کے امن اور بین الاقوامی جہاز رانی کو عدم استحکام سے دوچار کرے۔