.

ترکی کے لڑاکا طیاروں کی شام کے شمالی شہر الباب پر بمباری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ترکی کے لڑاکا طیاروں نے شام کے شمالی صوبے حلب میں واقع شہر الباب میں داعش کے پندرہ اہداف کو حملوں میں نشانہ بنایا ہے۔

ترک فوج شامی باغیوں کے ساتھ مل کر داعش کے جنگجوؤں کو شام کے سرحدی علاقے سے نکال باہر کرنے کے لیے کارروائی کررہی ہے۔ ترک صدر رجب طیب ایردوآن کا کہنا ہے کہ الباب پر کنٹرول داعش کے خلاف مزید کارروائیوں کے لیے بہت ضروری ہے۔ یہ شہر ترکی کی سرحد سے تیس کلومیٹر جنوب میں واقع ہے۔

ترک فورسز الباب پر قبضے کے بعد ایک اور قصبے منبج میں کرد فورسز کے خلاف کارروائی کا ارادہ رکھتی ہیں۔ پھر وہ داعش کے مضبوط گڑھ الرقہ کی جانب پیش قدمی کریں گی۔

ترک فوج نے ایک بیان میں کہا ہے کہ فضائی حملوں میں داعش کے دفاعی ٹھکانوں ،کمان مراکز اور اسلحے کے ایک ڈپو کو تباہ کردیا گیا ہے۔اسی علاقے میں داعش کے ساتھ جھڑپوں میں نو شامی باغی ہلاک اور باون زخمی ہوگئے ہیں۔

ترک فوج نے شام میں ''فرات کی ڈھال'' کے نام سے 24 اگست کو داعش کے خلاف آپریشن شروع کیا تھا ۔اس کارروائی کے دوران ترکی کے حمایت یافتہ شامی باغیوں نے 1620 مربع کلومیٹر علاقے پر قبضہ کر لیا ہے اور وہاں سے داعش کے جنگجوؤں کو پسپا کردیا ہے۔