.

تیونس: سابق صدر کا طیارہ 7.8 کروڑ ڈالر میں ترکی کو فروخت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

تیونس کی قومی فضائی کمپنی کے مطابق سابق صدر زین العابدین بن علی کے لیے مختص "ایئربس 340" طیارہ جو کئی سالوں سے فرانس میں کھڑا تھا ، اس کو ترکی کی فضائی کمپنی کو فروخت کر دیا گیا ہے۔

تیونس کی فضائی کمپنی میں خارجہ تعلقات کی ڈائریکٹر آمال بورقیبہ نے اتوار کے روز بتایا کہ مذکورہ طیارہ 18کروڑ 10 لاکھ تیونسی دینار (7.83 کروڑ ڈالر) میں فروخت کیا گیا۔ معاہدے کے طے پانے کی تاریخ معلوم نہیں ہو سکی۔

بن علی جن کی حکومت 2011 میں ختم ہو گئی تھی ، ان کے لیے مختص یہ طیارہ 2010 میں بعض تبدیلیوں کے لیے فرانس کے شہر بورڈو پہنچا تھا۔

ایک فرانسیسی اخبار کے مطابق بن علی ایک تجربہ کرنے کے لیے ایک مرتبہ اس طیارے پر سوار ہوئے تھے جس کے بعد طیارے کو بعض تبدیلیوں کے واسطے فرانس بھیج دیا گیا تھا۔

تیونس کی قومی فضائی کمپنی نے مذکورہ طیارے کو جنوری 2012 میں فروخت کے لیے پیش کیا تھا۔