.

شامی حزبِ اختلاف کا اسد حکومت پر جنگ بندی کی خلاف ورزیوں کا الزام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شامی حزب اختلاف نے اسد رجیم پر جنگ بندی کی مسلسل خلاف ورزیوں کا الزام عاید کیا ہے اور ان کی مذمت کی ہے۔

شامی حزب اختلاف کے مختلف دھڑوں نے ہفتے کے روز ایک مشترکہ بیان جاری کیا ہے جس میں کہا ہے کہ تمام فریقوں کو جنگ بندی کی شرائط کی پاسداری کرنی چاہیے اور اس ضمن میں کوئی استثنا نہیں ہونا چاہیے۔

روس اور ترکی کی ثالثی میں شامی حزبِ اختلاف اور صدر بشارالاسد کی حکومت کے درمیان جنگ بندی کا سمجھوتا طے پایا تھا۔اس پر جمعرات کی شب سے عمل درآمد کا آغاز ہوا تھا اور ان دونوں ممالک نے اس جنگ بندی کا سمجھوتا اور ایک قرارداد کا مسودہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کو بھیجا تھا۔

سلامتی کونسل میں اس مجوزہ قرارداد پر آج (ہفتے کے روز) رائے شماری کا امکان ہے۔اس میں جنگ بندی سمجھوتے کی توثیق کی گئی ہے اور شام میں قیام امن کے لیے ایک نقشہ راہ کی حمایت کی گئی ہے۔اس کے تحت پہلے ایک عبوری حکومت تشکیل دی جائے گی۔