مسجد نبوی میں دہشت گردی کا مرتکب شدت پسند ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب کی وزارت داخلہ نے ایک بیان میں بتایا ہے کہ پچھلے سال مسجد نبوی کے قریب دہشت گردی کی ایک کارروائی میں ملوث شدت پسند کو ریاض میں الیاسمین کالونی میں ایک کارروائی کےدوران قتل کردیا گیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق سعودی وزارت داخلہ کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے ک پولیس نے دہشت گردوں کے قبضے سے دو دستی بم اور دو خود کش جیکٹیں بھی برآمد کیں جنہیں ناکارہ بنا دیا گیا۔

وزارت داخلہ کے مطابق ریاض میں پولیس کے ساتھ جھڑپ میں ہلاک ہونے والا دہشت گرد طایع بن سالم بن یسلم الصیعری بم سازی کا ماہر تھا۔ اس کے علاوہ دہشت گردوں کی تربیت اور خود کش بمبار تیار کرنے میں بھی اسے خاص ملکہ حاصل رہا ہے۔ طائع کے تربیت یافتہ ایک دہشت گرد نے عیسر کے مقام پر واقع ایمرجنسی سروسز کی مسجد میں خود کو دھماکے سے اڑا دیا تھا۔ اس کے علاہ مقتول دہشت گرد نے سلیمان الفقیہ اسپتال اور مسجد نبوی میں بھی دہشت گردی کی کارروائی میں حصہ لیا تھا جس کے نتیجے میں متعدد افراد جاں بحق ہوگئے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں