سعودی عرب: بچے پر وحشیانہ تشدد کی ویڈیو جاری

تشدد میں ملوث شخص گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

سعودی عرب کی پولیس نے وزارت لیبر سماجی بہبود کے تعاون سے تبوک شہر میں ایک کم عمر بچے پر وحشیانہ تشدد کی ویڈیو سامنے آنے کے بعد ایک شخص کو حراست میں لیا ہے۔ سماجی رابطوں کی ویب سائیٹس بالخصوص ’ٹوئٹر‘ پرسامنے آنے والے ویڈیو میں ایک بچے کے جسم کے دیگر حصوں اور سرپر تشدد کی واضح علامات دیکھی جاسکتی ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کےمطابق وزارت برائے سماجی بہبود کے ترجمان خالد ابا الخیل نے منگل کی شام بتایا کہ متعلقہ حکام نے بچے پر تشدد کی ویڈیو سامنے آنے کے بعد تبوک میں الخالدیہ کالونی سے ایک شخص کو بچے پر تشدد کے الزام میں حراست میں لیا ہے۔ تشدد کا نشانہ بننے والے بچے کہ شناخت ظاہر نہیں کی گئی تاہم اس کا تعلق تبوک سے بتایا جاتا ہے۔ بچے پر تشدد کی ویڈیو دو روز قبل سوشل میڈیا پر وائرل ہوئی تھی جس کے بعد پولیس نے اس واقعے میں ملوث شخص کی گرفتاری کے لیے چھاپے مارنے شروع کیے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں