.

داعش نے اسرائیل پر راکٹ داغنے کی ذمے داری قبول کر لی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

داعش تنظیم نے بدھ کی شب اسرائیل کے شہر ایلات پر ہونے والے راکٹ حملے کی ذمے داری قبول کر لی ہے۔ تنظیم نے جمعرات کے روز اپنے ایک بیان میں بتایا ہے کہ اس نے اسرائیل کے جنوب میں واقع شہر پر گراڈ نوعیت کے کئی راکٹ داغے۔

اس سے قبل اسرائیلی حکام نے دعویٰ کیا تھا کہ گذشتہ روز مصر کے جزیرہ نما سینا سے جنوبی اسرائیل کے شہر ایلات پر چار راکٹ داغے گئے تھے جن میں سے تین راکٹ دفاعی شیلڈ آئرن ڈوم کی مدد سے تباہ کردیے گئے جب کہ ایک راکٹ ویران علاقے میں گرا۔ تاہم اس کے نتیجے میں کسی قسم کا جانی نقصان نہیں ہوا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق جزیرہ سیناء سے راکٹ حملوں کے بعد اسرائیلی فوج کی جانب سے خطرے کے الارم بجائے گئے۔ اس کے علاوہ جنوبی اسرائیل کے ایلات شہر میں زور دار دھماکوں کی آوازیں بھی سنی گئیں۔

قبل ازیں اسرائیلی فوج نے دعویٰ کیا تھا کہ بدھ اور جمعرات کی درمیانی شب شام کے اندر سے ایک ہاون راکٹ اسرائیل پر داغا گیا تاہم اس کے نتیجے میں کسی نقصان کی اطلاع نہیں ملی۔ اسرائیلی فوج نے راکٹ حملے کے بعد شام میں بشار فوج کے ٹھکانوں پر گولہ باری بھی کی۔