.

شام: امریکی فضائی حملوں میں القاعدہ کے 11 ارکان ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکی وزارت دفاع (پینٹاگون) نے اعلان کیا ہے کہ رواں ماہ شام کے شہر ادلب کے نزدیک امریکی طیاروں کے دو مختلف فضائی حملوں میں القاعدہ تنظیم کے 11 ارکان ہلاک ہو گئے۔ ہلاک ہونے والوں میں ایک رکن کا سابق القاعدہ سربراہ اسامہ بن لادن اور تنظیم کے دیگر بڑے رہ نماؤں کے ساتھ تعلق تھا۔

بدھ کی شب جاری ہونے والے بیان میں وزارت دفاع نے بتایا کہ 4 فروری کو کی جانے والی کارروائی میں ابو ہانی المصری بھی مارا گیا جو 80ء اور 90ء کی دہائیوں میں افغانستان میں القاعدہ تنظیم کے تربیتی کیمپوں کو قائم کرنے اور ان کو چلانے کا ذمے دار رہا۔ اس نے ہزاروں جنگجو بھرتی بھی کیے۔ المصری کے اسامہ بن لادن اور القاعدہ کے موجودہ سربراہ ایمن الظواہری کے ساتھ قریبی تعلقات رہے۔

امریکی وزارت دفاع کے مطابق اس سے قبل 3 فروری کو ہونے والی ایک دوسرے فضائی حملے میں القاعدہ کے 10 ارکان ہلاک کر دیے گئے تھے۔