.

جنیوا مذاکرات کے لیے شامی حزب اختلاف کا وفد نامزد

محمد صبرا اعلیٰ مذاکرات کار ہوں گے،حزبِ اختلاف کے 20 مندوبین شرکت کریں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شامی حزبِ اختلاف نے جنیوا میں 20 فروری کو آغاز ہونے والے امن مذاکرات کے لیے محمد صبرا کو اپنا اعلیٰ مذاکرات کار نامزد کیا ہے اور وہ حزب اختلاف کے بیس رکنی وفد کی قیادت کریں گے۔

العربیہ نیوز چینل کو ذرائع نے بتایا ہے کہ شامی حزب اختلاف نے سعودی دارالحکومت الریاض میں اپنے اجلاس کے بعد ناصر الحریری کو اپنا مندوبِ اعلیٰ نامزد کیا ہے۔اس اجلاس میں حزب اختلاف کی اعلیٰ مذاکراتی کمیٹی اور گذشتہ ماہ قزاقستان کے دارالحکومت آستانہ میں دو روزہ مذاکرات میں حصہ لینے والے وفد نے شرکت کی ہے۔

اعلیٰ مذاکراتی کمیٹی کے ترجمان سالم المسلط نے العربیہ کے سسٹر چینل الحدث کو بتایا ہے کہ اپوزیشن کے مختلف دھڑوں کی جانب سے جنیوا چہارم مذاکرات کے لیے بیس مندوبین اور بیس ہی کنسلٹینٹس بھیجے جائیں گے۔

اقوام متحدہ کے خصوصی ایلچی برائے شام اسٹافن ڈی مستورا نے قبل ازیں گذشتہ ہفتے شامی حزب اختلاف کو خبردار کیا تھا کہ اگر انھوں نے جنیوا میں ہونے والے آیندہ مذاکرات کے لیے اپنے مندوبین کو بدھ تک نامزد نہ کیا تو وہ خود ہی حزب اختلاف کے مذاکراتی وفد کا چناؤ کر لیں گے۔تاہم حزب اختلاف کے دھڑوں نے ان کی اس دھمکی کو مسترد کردیا تھا۔