.

دنیا کے سب سے بڑے طیارے کی مصری اور اماراتی خواتین ہواباز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصری خاتون ہوا باز نیون درویش دنیا کے سب سے بڑے مسافر طیارے کو اڑانے والی پہلی عرب خاتون بن گئی ہیں۔ نیون نے یہ نمایاں اعزاز ایسے وقت حاصل کیا جب بدھ کے روز دنیا بھر میں خواتین کا عالمی دن منایا جا رہا ہے۔

ایمریٹس ایئرلائن کے ایئر بس A-380 طیارے نے دبئی سے ویانا جانے والی پرواز کے لیے اڑان بھری تو کاک پٹ میں مصری خاتون کپتان کے ساتھ ان کی معاون کپتان علیا المہیری بھی موجود تھیں جو متحدہ عرب امارات کی کم عمر ترین فرسٹ آفیسر بھی ہیں۔

ایمریٹس نے فیس بک پر اپنے سرکاری صفحے پر ایک وڈیو بھی پوسٹ کی جس میں نیون درویش کے زیر قیادت طیارے کو اڑان بھرتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔ وڈیو کو 17 لاکھ سے زیادہ مرتبہ دیکھا جا چکا ہے۔

طیارے کے ویانا میں اترنے کے بعد نیون اور علیا نے ایک دوسرے کو مبارک باد پیش کی۔

اماراتی فرسٹ آفیسر علیا المہیری نے ایک وڈیو کلپ میں کہا کہ " کپتان نیون درویش واقعتا ایک ماہر اور انتہائی نمایاں ہوا باز ہیں۔ وہ پرواز کے دوران کسی بھی طرح کے حالات میں انتہائی پرسکون رہتی ہیں۔ وہ ہر نئی صبح پہلے روز کی طرح مسکراہٹ اور تازہ دم چہرے کے ساتھ کام پر آتی ہیں"۔

دوسری جانب نیون درویش نے علیا المہیری کے متعلق تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ " وہ انتہائی مثبت رججان کی حامل پہلی نوجوان ہوا باز ہیں ، ان کی شخصیت امتیازی کردار کی حامل ہے۔ میں علیا کے ساتھ ہوا بازی کے تجربے پر فخر محسوس کر رہی ہوں۔ یہ تجربہ مستقبل میں خواتین ہوا بازوں کی مکمل نسل تیار کرنے کے لیے ایک بڑا موقع ہے"۔

1