.

سعودی عرب اور جرمنی کے درمیان 6 معاہدوں پر دستخط

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

جدہ میں اتوار کے روز قصرِ سلام میں خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز اور جرمن چانسلر اینگلا مرکل کے درمیان ملاقات ہوئی۔ ملاقات میں دو طرفہ تعلقات اور سعودی عرب اور جرمنی کے درمیان مختلف شعبوں میں تعاون کے علاوہ علاقائی اور بین الاقوامی سطح پر پیش آنے والے واقعات زیر بحث آئے۔

سعودی عرب میں جرمنی کے سفیر ڈیٹر ہالر نے روزنامہ الشرق الاوسط کو بتایا کہ "شاہ سلمان اور مرکل کے درمیان بات چیت کا نتیجہ دونوں ملکوں کے درمیان 6 معاہدوں اور مفاہمتی یادداشتوں کی صورت میں سامنے آیا۔ ان میں سکیورٹی ، دفاعی ، سیاسی اور اقتصادی شعبوں کے علاوہ برلن میں دو ماہ بعد منعقد ہونے والے جی 20 سربراہ اجلاس کے حوالے سے دو طرفہ ہم آہنگی پر مبنی مشترکہ موقف بھی شامل ہے"۔

ہالر کے مطابق دستخط ہونے والے 6 معاہدوں میں سے 3 ریاض اور برلن حکومتوں کے درمیان ہیں جب کہ دیگر 3 سعودی سرکاری اداروں اور جرمن عالمی کمپنیوں کے بیچ طے پائے۔ جن اہم شعبوں میں تعاون کے معاہدے اور مفاہمتی یاد داشتیں سامنے آئیں ان میں پولیس ، جنرل ٹرانسپورٹ بالخصوص میٹرو ٹرین ، فضائی سکیورٹی ، جرمن عسکری اکیڈمی میں سعودی افسران کی تربیت ، سعودی ترقیاتی فنڈ اور جرمنی کی وزارت بین الاقوامی تعاون کے درمیان کوآرڈی نیشن شامل ہے۔

ہالر نے جرمن چانسلر کی سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن نایف اور نائب ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان کے ساتھ الگ الگ ملاقاتوں کا بھی ذکر کیا۔ جرمن سفیر کے مطابق اینگلا مرکل پیر کے روز چند گھنٹوں کے لیے متحدہ عرب امارات کا دورہ کر کے اسی روز برلن روانہ ہو جائیں گی۔