.

بحرین کے اقدامات کا خیر مقدم اور متوازی وجود مسترد کرتے ہیں: قرقاش

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

متحدہ عرب امارات کے وزیر مملکت برائے خارجہ امور انور قرقاش نے بحرین میں اُس کارروائی کا خیر مقدم کیا ہے جس کے نتیجے میں الدراز کے علاقے میں ایک دہشت گرد سیل کی گرفتاری عمل میں آئی۔

منگل کے روز اپنے سرکاری ٹوئیٹر اکاؤنٹ پر انہوں نے کہا کہ "خلیجی ممالک میں ہمارے لیے ممکن نہیں کہ ہم ریاست کے متوازی وجود قبول کریں اور اس کو معمول کی صورت حال شمار کریں۔ لہذا اس جذبے اور روح کے ساتھ ہم بحرین میں اپنے برادران کے اقدامات کا خیر مقدم کرتے ہیں"۔

قرقاش کا مزید کہنا تھا کہ " بحرین کے اقدامات پر ایران حزب اللہ کے ردود عمل سے ہمیں فرقہ واریت کا اداراک ہو رہا ہے۔ یقینا اس کارروائی سے چہرے بے نقاب اور اور امور واضح ہو گئے"۔

بحرین نے منگل کے روز اعلان کیا تھا کہ دہشت گردی کے حوالے سے 286 مطلوب اور سزا یافتہ افراد کو گرفتار کر لیا گیا ہے۔ حکام کے مطابق ان افراد میں اکثریت الدراز کے علاقے میں عیسی قاسم نامی شخص کے گھر میں روپوش تھی۔