.

شام : صوبہ ادلب میں کار بم دھماکے میں 10 افراد ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام میں باغیوں کے زیر قبضہ صوبے ادلب میں کار بم دھماکے میں دس افراد ہلاک اور کم سے کم تیس زخمی ہوگئے ہیں۔

برطانیہ میں قائم شامی رصدگاہ برائے انسانی حقوق نے اتوار کے روز اطلاع دی ہے کہ صوبے ادلب میں ترکی کی سرحد کے نزدیک واقع قصبے الدانا میں ہفتے کوایک بازار میں کار بم دھماکا ہوا تھا۔اس وقت لوگ عید کی خریداری میں مصروف تھے۔مرنے والوں میں اٹھارہ سال سے کم عمر کے تین بچے بھی شامل ہیں۔ قبل ازیں اسی قصبے میں ایک اور بم دھماکے میں دو افراد ہلاک ہوگئے تھے۔

صوبہ ادلب کے کم وبیش تمام علاقوں پر باغی گروپوں کا قبضہ ہے اور ان کے درمیان بھی گاہے گاہے جھڑپیں ہوتی رہتی ہیں ۔باغیوں نے سخت گیر جنگجو گروپ داعش پر بھی اس علاقے میں حملوں کے الزامات عاید کیے ہیں۔

ترکی کی سرحد کے ساتھ واقع ادلب شامی باغیوں کا مضبوط گڑھ ہے۔حا ل ہی میں شام کے دوسرے علاقوں اور بالخصوص دارالحکومت دمشق کے نواح میں واقع چار قصبوں سے باغی جنگجوؤں اور ان کے خاندانوں کو ادلب کے مختلف علاقوں میں منتقل کیا گیا ہے۔وہ وہاں انتہائی کسمپرسی کی حالت میں رہ رہے ہیں اور اقوام متحدہ اور امدادی ایجنسیوں نے ادلب میں انسانی صورت حال پر گہری تشویش کا اظہار کیا ہے۔