اسرائیل نے فلسطینی شہر کا توسیعی منصوبہ منجمد کردیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیلی کابینہ نے دریائے اردن کے مغربی کنارے میں واقع سب سے زیادہ گنجان آباد فلسطینی شہر کی توسیع کا منصوبہ منجمد کردیا ہے۔اسرائیل نے ایک قطع اراضی پر کنٹرول سے دستبرداری کے بدلے میں یہ منصوبہ بنایا تھا لیکن فلسطینیوں کے لیے اس رعایتی تجویز پر یہودی آبادکاروں نے سخت رد عمل کا اظہار کیا تھا۔

اسرائیلی وزیراعظم بنیامین نیتن یاہو کے دفتر کے ایک ترجمان نے کہا ہے کہ حکومت اسرائیلی فوج کے کنٹرول میں مغربی کنارے کے علاقوں میں فلسطینیوں کی ترقی کے معاملے پر اب اس ماہ کے آخر میں غور کرے گی۔

اس وقت تک علاقہ سی کے ایک حصے میں قلقلیہ شہر کی توسیع کے لیے تجویز پر عمل درآمد روک دیا گیا ہے۔گذشتہ سال نیتن یاہو کی حکومت نے نہایت خاموشی سے اس منصوبے کی منظوری دی تھی تاکہ فلسطینی شہر کو ایریا سی تک توسیع دے کر دُگنا بڑا کیا جاسکے۔ اس وقت سے یہودی آباد کار اسرائیلی حکومت کے اس فیصلے کے خلاف احتجاج کررہے ہیں اور انھوں نے اس کو ’’دہشت گردی کا انعام‘‘ قرار دیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں