.

حوثیوں کی وجہ سے ایک لاکھ یمنی مارے گئے: رہ نما پیپلز کانگریس

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے سابق صدر علی عبداللہ صالح کی جماعت کے ایک رہ نما عادل الشجاع نے حوثی ملیشیا پر الزام عائد کیا ہے کہ اُس کی بھڑکائی ہوئی جنگ میں تین سال کے دوران ایک لاکھ افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں۔

الشجاع نے اپنے فیس بک صفحے پر دیے گئے بیان میں کہا ہے کہ جنگ کے سبب لاکھوں افراد بھوک اور بیماریوں سے دوچار ہوئے اور حوثیوں کی جیلیں بھی قیدیوں سے بھری ہوئی ہیں۔

الشجاع نے حوثیوں کو ایک ایسی طفیلی جماعت قرار دیا جو جنگوں پر پلتی ہے اور یہ جانتی ہے کہ جنگ کا جاری رہنا اس جماعت کے مادی طور پر دولت کمانے کا موقع ہے۔ الشجاع نے باور کرایا کہ یمنی عوام اس جماعت کے لیے نفرت کے جذبات رکھتے ہیں۔

معزول صالح کی جماعت کے رہ نما نے اپنی پیپلز کانگریس پارٹی پر الزام عائد کیا کہ وہ بین الاقوامی چاہت کے خلاف حوثی جماعت کو سپورٹ فراہم کر رہی ہے ، اگر وہ اس کو چھوڑ دے تو حوثیوں کی جماعت تاریخ کے صفحات سے غائب ہو جائے۔