.

شامی فوج کا اردن کی سرحد کے ساتھ واقع 30 کلومیٹر علاقے پر کنٹرول

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شامی فوج اور اس کے اتحادیوں نے اردن کی سرحد کے ساتھ واقع تیس کلومیٹر علاقے پر دوبارہ کنٹرول حاصل کر لیا ہے اور وہاں سے باغی جنگجو پسپا ہوگئے ہیں۔

حزب اللہ کے زیر انتظام ایک ملٹری میڈیا یونٹ نے اطلاع دی ہے کہ شامی فوج اور اس کے اتحادیوں نے اردن کی سرحد کے ساتھ واقع صوبے سویدہ میں تمام سرحدی چوکیوں اور چیک پوائنٹس پر کنٹرول حاصل کر لیا ہے۔شامی فوج نے اس کو اپنی بڑی کامیابی قرار دیا ہے۔

تاہم عرب ممالک اور مغرب کے حمایت یافتہ باغی گروپوں کا شام کے بیشتر جنوب مغربی علاقے پر کنٹرول برقرار ہے۔ ان علاقوں کی اسرائیل اور اردن کے ساتھ سرحدیں ملتی ہیں۔

واضح رہے کہ صوبہ سویدہ امریکا اور روس کی ثالثی میں جولائی میں طے پانے والے جنگ بندی کے سمجھوتے میں شامل نہیں ہے۔اس کے نزدیک واقع جنوب مغربی علاقوں میں شامی فوج اور باغی گروپوں کے درمیان جنگ بندی جاری ہے۔

مغرب کے حمایت یافتہ ایک باغی گروپ شہید احمد عبدہ بریگیڈ کے ترجمان سعید سیف نے بتایا ہے کہ شامی فوج نے جمعرات کو سویدہ سے مشرق میں دو اطراف سے حملہ کیا تھا اور اب سویدہ کا بیشتر مشرقی علاقہ اس کے کنٹرول میں آگیا ہے اور شامی فوج نے تنازع کے آغاز میں جن چوکیوں کو خالی کیا تھا،اب ان پر دوبارہ قبضہ کر لیا ہے۔