.

بائیکاٹ کے ساتھ قطر کی معیشت کا مستقبل منفی : اسٹینڈرڈ اینڈ پُوورز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

معروف امریکی ایجنسی Standard & Poor's نے قطر کے لیے AA- کریڈٹ ریٹنگ کی تصدیق کرتے ہوئے مستقبل کے لیے قطری معیشت کا منظر نامہ بھی منفی دکھایا ہے۔ ایجنسی نے توقع ظاہر کی ہے کہ عرب اور دیگر ممالک کی جانب سے جاری بائیکاٹ کے نتیجے میں قطر کی معیشت کی نمو سُست ہو گی اور مالیاتی کاکردگی میں بھی رکاوٹ پیش آئے گی۔ یہ بات ایک برطانوی خبر رساں ایجنسی کی جانب سے جاری رپورٹ میں بتائی گئی ہے۔

امریکی ایجنسی نے بتایا کہ "فی الحال ہمیں توقع نہیں کہ قطر یا بائیکاٹ کرنے والے ممالک کے مواقف میں کوئی تبدیلی آئے گی"۔

دوسری جانب قطر کے بینکوں کی جانب سے مالیاتی سیکٹر پر پڑنے والے اُن سنگین اثرات سے نمٹنے کی کوشش کی جا رہی ہے جو سعودی عرب ، امارات ، بحرین اور مصر کی جانب سے اقتصادی بائیکاٹ کے نتیجے میں سامنے آئے ہیں۔ اس سلسلے میں قطری بینک بیرونی قرضوں کے حصول کے واسطے بونڈز کا اجراء کر رہے ہیں۔ بائیکاٹ کے بعد خطرات کی سطح میں اضافے کے سبب ان بونڈز کا اجراء بلند ترین نرخوں پر ہو گا۔

قطر کے مرکزی بینک کے اعداد و شمار کے مطابق قطر کے مقامی بینک غیر ملکی ڈپازٹس کی مد میں 7.5 ارب ڈالر اور بینکوں کے بیچ ڈپازٹس اور متبادل قرضوں کی مد میں 15 ارب ڈالر سے محروم ہو چکے ہیں۔ لہذا اب قطری بینک مالی بحران کے اثرات پر روک لگانے کے لیے کوشاں ہیں۔

تجزیہ کار یہ توقع کر رہے ہیں کہ دوحہ میں موجود بینک آئندہ چند ماہ میں 3 سے 4 ارب ڈالر کے مزید ڈپازٹس سے ہاتھ دھو لیں گے۔