.

شاہ سلمان جمعرات کو روس کا دورہ کریں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

کِرملن کے مشیر یوری اوشاکوف نے پیر کے روز اعلان کیا ہے کہ سعودی فرماں روا شاہ سلمان بن عبدالعزیز جمعرات کے روز روس کا دورہ کریں گے۔ روس کی سرکاری خبر رساں ایجنسی ٹاس نے اوشاکوف کا یہ بیان نقل کیا ہے کہ "ہم پانچ اکتوبر کو شاہ کی آمد کے منتظر ہوں گے"۔

یہ دورہ تیل برآمد کرنے والے ممالک کی تنظیم (اوپیک) کے اجلاس سے ایک ماہ قبل کیا جا رہا ہے۔ توقع ہے کہ اجلاس میں تیل کی پیداوار کی سطح کم رکھنے کی مدت میں توسیع کو زیر بحث لایا جائے گا جس کے نتیجے میں قیمتوں میں بہتری آئی ہے۔ واضح رہے کہ سعودی عرب اوپیک کا سب سے بڑا رکن ہے۔

اس سے قبل گزشتہ ربس کے اختتام پر اوپیک تنظیم اور اس کے باہر تیل پیدا کرنے والے ممالک نے چھ ماہ تک کے لیے تیل کی یومیہ پیداوار میں 18 لاکھ بیرل کی کمی پر اتفاق رائے کا اظہار کیا تھا۔

یاد رہے کہ ستمبر 2016 میں چین میں جی 20 کے سربراہ اجلاس کے ضمن میں سعودی ولی عہد شہزادہ محمد بن سلمان اور روسی صدر کے ولادیمر پیوتن کے درمیان ملاقات ہوئی تھی۔ ملاقات میں دونوں شخصیات نے باور کرایا تھا کہ تیل کے شعبے میں سعودی عرب اور روس کے درمیان تعاون سے تیل کی عالمی منڈیوں کو نفع حاصل ہو گا۔

سعودی ولی عہد نے جون 2015 میں روس کا دورہ کیا تھا۔