.

شاہ سلمان کا بین المذاہب مکالمے کی اہمیت پر زور

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود نے مختلف مذاہب اور ثقافتوں کے پیروکاروں کے درمیان مکالمہ جاری رکھنے کے لیے کام کرنے کی اہمیت کو باور کرایا ہے جس کا مقصد رواداری کے بنیادی اصولوں کو مضبوط کرنا ، غُلو اور شدت پسندی کا انسداد عمل میں لانا اور بین الاقوامی سطح پر امن و سلامتی کو یقینی بنانا ہے۔ سعودی فرماں روا نے یہ بات روسی مسلمانوں کی مرکزی مذہبی انتظامیہ کے سربراہ مفتی اعظم شیخ طلعت تاج الدین سے ملاقات کے دوران کہی۔

دونوں شخصیات کے درمیان ملاقات ہفتے کے روز روسی دارالحکومت ماسکو میں شاہ سلمان کی قیام گاہ پر ہوئی۔ اس موقع پر شیخ طلعت کے ہمراہ روس کی کئی اہم اسلامی شخصیات بھی تھیں۔

روسی مفتی اعظم اور ان کے ساتھیوں نے شاہ سلمان کے تاریخی دورے کے دوران سعودی فرماں روا سے ملاقات پر اپنی گہری مسرّت کا اظہار کیا۔ انہوں نے اس بات کی بھی خواہش ظاہر کی کہ مختلف مذاہب اور ثقافتوں کے پیروکاروں کے بیچ اعتدال اور رواداری کو پھیلایا جائے اور ساتھ ہی دہشت گردی اور شدت پسندی کے انسداد کے لیے مل کر کام کیا جائے۔