.

ایرانی غلبے سے متعلق روحانی کے بیان پر سعد حریری کی شدید مذمت

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لبنان کے وزیراعظم سعد حریری نے ایرانی صدر کے اُس بیان کی سخت مذمت کی ہے جس میں حسن روحانی کا کہنا تھا کہ ایران خطے کے علاوہ شمالی افریقہ اور خلیج کے ممالک کے فیصلوں پر کنٹرول رکھتا ہے۔

پیر کے روز ٹیلی وژن پر خطاب کرتے ہوئے روحانی نے کہا کہ "عراق ، شام ، لبنان ، شمالی افریقہ اور خلیج میں ایران کے بغیر کوئی فیصلہ کن اقدام نہیں کیا جا سکتا"۔

ایرانی صدر کے بیان کا جواب دیتے ہوئے لبنانی وزیراعظم سعد حریری نے اپنی ٹوئیٹ میں لکھا کہ "ہم روحانی کے اس قول کو کہ لبنان میں ایران کے بغیر کوئی فیصلہ نہیں کیا جا سکتا.. مسترد کرتے ہیں"۔

حریری کے مطابق لبنان ایک خود مختار عرب ریاست ہے جو کسی کی ہدایت قبول نہیں کرے گی اور وہ اپنے وقار پر آنچ آنے کو مسترد کرتی ہے"۔

روحانی نے اپنے خطاب میں امریکا کو بھی تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ "خطے میں ایران کی موجودگی اور اس کی دفاعی صلاحیتوں کا معاملہ اٹھانا گویا کہ آگے کی جانب بھاگنا ہے"۔

روحانی نے اپنے خطاب میں پاسداران انقلاب کی فورسز اور خطے کے ممالک میں اس کی مداخلت کے لیے اپنی بھرپور سپورٹ کا اظہار کیا جب کہ اس سے قبل وہ پاسداران کو تنقید کا نشانہ بناتے تھے۔ انہوں نے کہا کہ "پاسداران نہ صرف ایرانی عوام کو محبوب ہیں بلکہ وہ عراقی، کرد ، لبنانی اور شامی عوام کے دلوں میں بھی بستے ہیں"۔