.

دبئی : دوست کی لاش چُھپانے والے 3 خلیجی طلبہ کا مُعمّہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

دبئی میں اتوار کے روز فوجداری عدالت میں خلیجی ممالک سے تعلق رکھنے والے 3 طلبہ کو پیش کیا گیا جنہوں نے منشیات کی زیادہ مقدار لینے کے سبب موت کی نیند سو جانے والے اپنے ایک ساتھ طالب علم کی لاش کو چھپا دیا تھا۔ مذکورہ تینوں طلبہ کی عمر 19 برس سے زیادہ نہیں ہے۔

مقامی میڈیا کے مطابق تین میں سے ایک طالب علم موت کا شکار ہونے والے نوجوان کے ساتھ ایک گاڑی میں بیٹھ کر ممنوعہ منشیات کا استعمال کر رہے تھے۔ اس دوران زیادہ مقدار کے سبب ایک نوجوان چل بسا۔ اس صورت حال سے پریشان ہو کر بچ جانے والے نوجوان نے مدد کے لیے اپنے دو ساتھیوں کو بلا لیا۔

تینوں نوجوانوں کو اس کے سوا کوئی راستہ نظر نہیں آیا کہ اپنے مردہ ساتھی کی لاش کو الہباب کے ریتیلے علاقے میں چھپا دیں۔ انہوں نے اپنی گاڑی کو راہ گیروں کی نظروں سے روپوش رکھنے کے لیے اسے ایک ٹیلے کے پیچھے چھپا دیا۔

تاہم دبئی پولیس نے جس کو اگست کے اواخر میں متوفی نوجوان کے لاپتہ ہونے کی اطلاع ملی تھی.. اُس نے ریکارڈ وقت میں نوجوانوں تک پہنچ کر اس جرم کی گتھی سُلجھا دی۔