.

سعد حریری حزب اللہ کے ہاتھوں "ہائی جیک" ہو چکے ہیں : لبنانی رکنِ پارلیمنٹ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لبنانی پارلیمنٹ کے رکن خالد الظاہر کا کہنا ہے کہ وزیراعظم سعد حریری لبنان میں حزب اللہ ملیشیا کے اسلحے کے ہاتھوں "ہائی جیک" ہو چکے ہیں۔ الظاہر کے مطابق حزب اللہ حریری کے سیاسی فیصلوں پر غالب ہے اور اس نے دوست ممالک جن میں سعودی عرب سرِفہرست ہے ان کے معاملات میں مداخلت روک دینے سے انکار کر دیا ہے۔

سعد حریری نے 5 دسمبر کو اپنی کابینہ کے اجلاس کے بعد اعلان کیا تھا کہ حکومت نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ کسی بھی تنازع اور جنگ کے علاوہ عرب ممالک کے اندرونی معاملات سے کنارہ کش رہے گی تا کہ برادر عرب ممالک کے ساتھ لبنان کے تعلقات برقرار رکھے جا سکیں۔ انہوں نے بین الاقوامی منشوروں اور قراردادوں کے احترام کو بھی باور کرایا۔

واضح رہے کہ 5 دسمبر کو ہونے والا کابینہ کا اجلاس سعد حریری کی جانب سے استعفاء واپس لیے جانے کے بعد پہلا اجلاس تھا۔ اس سے قبل 4 نومبر کو حریری نے سعودی دارالحکومت میں قیام کے دوران لبنانی وزارت عظمی سے مستعفی ہونے کا اعلان کر دیا تھا۔