.

علی صالح کی نصیحتیں : حوثیوں کا مقابلہ کرنے کے لیے ایندھن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے سابق صدر علی عبداللہ صالح نے دو دسمبر کو حوثیوں کے خلاف اپنی انتفاضہ تحریک کا اعلان کیا تو بہت سے لوگ یہ جانتے تھے کہ ان کی تحریک سچّی ہے۔ جن لوگوں نے انتفاضہ کی سچّائی پر شکوک کا اظہار کیا تھا وہ بھی دو روز بعد حوثیوں کے ہاتھوں صالح کی ہلاکت پر اس بات کے قائل نظر آئے کہ سابق صدر نے اس اعلان کی قیمت اپنی زندگی کی صورت میں ادا کی۔

علی عبداللہ صالح نے اپنے آخری سیاسی پیغام میں یمنی عوام کو مخاطب کر کے سیاسی نصیحتیں کی تھیں جو درجِ ذِیل ہیں :

1 - یمن میں 1962 میں شاہی نظام کے خلاف آنے والے انقلاب کا دفاع

2 - فرائض کی انجام دہی

3 - مسلح افواج حوثیوں کی کسی ہدایت کو قبول نہ کریں

4 - اپنی یک جہتی کے واسطے جد و جہد کریں

5 - تمام سیاسی قوتوں پر لازم ہے کہ قومی دھارے میں اپنا کردار ادا کریں

6 - فائربندی کو یقینی بنائیں

7 - اقتدار عوام کی ملکیت ہےالسلطة ملك للشعب

8 - عوام پر لازم ہے کہ خود پر ذمّے داری عائد کریں

9 - اپنے امن اور استحکام کی حفاظت کریں

10 - عوام کے ڈٹے رہنے پر اُنہیں میرا سلام