.

اسرائیلی فوجیوں نے فلسطینی بچّے کے سر کو پاؤں سے روندا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

اسرائیلی فوج نے بدھ کے روز فلسطینی بچّے فوزی الجنیدی کو رہا کر دیا ہے جس کی ذرائع ابلاغ میں آنے والی تصویر صہیونی ظلم کے سامنے مزاحمت کی "علامت" بن گئی۔ فوزی کو گزشتہ ہفتے فلسطین میں امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے اعلانِ قُدس کے خلاف احتجاجی مظاہروں کے دوران گرفتار کر لیا گیا تھا۔ اس موقع پر لی جانے والی تصویر میں فوزی کی آنکھوں پر پٹی بندھی ہوئی تھی ، اس کے ہاتھوں میں ہتھکڑیاں تھیں اور وہ 23 اسرائیلی فوجیوں کے نرغے میں تھا۔

بدھ کے روز اپنی رہائی کے فوری بعد متعدد اخباری بیانات میں فوزی نے بتایا کہ "اسرائیلی فوجیوں نے مجھے حراست میں لیتے ہی فوری طور پر زدوکوب کیا اور زمین پر ڈال دیا۔ میرے جسم کے ہر حصّے کو ضرب کا نشانہ بنایا گیا اور کئی فوجیوں نے میرے سر کو اپنے قدموں سے روندا"۔