.

مصر : حلوان کے چرچ پر حملہ کرنے والے زخمی دہشت گرد کا آپریشن

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر میں ایک سکیورٹی ذریعے کے اعلان کے مطابق جمعے کے روز قاہرہ کے جنوب میں حلوان کے چرچ کو حملے کا نشانہ بنانے والے ایک دہشت گرد کا ہفتے کو صبح سویرے آپریشن کیا گیا ہے۔

مصر کی سرکاری خبر رساں ایجنسی نے مذکورہ ذریعے کا نام بتائے بغیر تصدیق کی ہے کہ زخمی حالت میں پکڑے جانے والے اس دہشت گرد کو ہسپتال کے آپریشن تھیٹر سے فارغ کر دیا گیا ہے۔

ذریعے کے مطابق اس دہشت گرد کو جسم کے مختلف حصوں میں گولیاں لگی تھیں۔

جمعے کی شام مصری وزارت داخلہ نے اپنے ایک اعلان میں انکشاف کیا تھا کہ چرچ پر حملہ کرنے والے شخص کا نام ابراہیم اسماعیل مصطفی ہے اور 33 سالہ یہ حملہ آور ایک اہم ترین مفرور دہشت گرد ہے۔

گزشتہ روز جمعے کی صبح قاہرہ کے جنوب میں مسلح افراد نے ایک چرچ اور ایک تجارتی مرکز کو حملوں کا نشانہ بنایا تھا۔ سرکاری ذرائع کے مطابق کارروائیوں میں 8 قِبطیوں سمیت 10 افراد ہلاک اور 5 زخمی ہوئے۔ حملوں کی ذمے داری داعش تنظیم نے قبول کی۔