.

شہریوں کو ریلیف دینے کے لئے سعودی عرب میں عوام دوست اقدامات کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی عرب حکومت نے نئے سال کے تحفے کے طور پر شہریوں کے لئے متعدد عوام دوست معاشی اقدامات کا اعلان کیا ہے جن کا مقصد ویلیو ایڈڈ ٹیکس اور اشیائے صرف کی قیمتوں میں اضافہ سے ان پر پڑنے والے بوجھ میں ریلیف فراہم کرنا ہے۔

اس مقصد کے لئے خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز نے جمعہ کی شب رات گئے شاہی فرامین جاری کئے جن میں سول اور فوجی شعبوں میںا خدمات سرانجام دینے والے سعودی شہریوں کے لیے مہنگائی کا مقابلہ کرنے کی خاطر مالی الاؤنس دینے کا اعلان کیا گیا ہے۔ شاہی فرامین کے مطابق:

1 ۔ یکم جنوری 2018 مطابق 14 ربیع الثانی 1439 ہجری سے سول ملازمین اور فوجی خدمات سرانجام دینے والے سعودی شہری رواں مالی سال کے لیے سالانہ بونس کے حق دار ہوں گے۔

2 ۔ مملکت کے سول اور فوجی شعبے میں خدمات انجام دینے والے سعودی شہریوں کو ایک سال تک مہنگائی الاؤنس کی مد میں ماہانہ (1000) ریال دیئے جائیں گے۔

3 ۔ سعودی عرب کے مشکل ترین جنوبی محاذ پر اگلے مورچوں میں خدمات سرانجام فوجی اہلکار (5000) ریال مالیت کے خصوصی الاونس کے حق دار ہوں گے۔

4 ۔ پبلک پنشن ایجنسی سے ماہانہ پینشن وصول کرنے والے سعودی شہریوں کو ایک سال تک مہنگائی الاؤنس کی مد میں اضافی (500) ریال ماہانہ دیے جائیں گے۔

5 ۔ سوشل سکیورٹی پروگرام سے مستفید ہونے والوں کے لیے اضافی طور پر ماہانہ (500) ریال کا مہنگائی الاؤنس دیا جائے گا۔

6 ۔ طلبہ اور طالبات کو دیے جانے والے ماہانہ بونس میں ایک سال کے لیے (10%) کا اضافہ۔

7 ۔ صحت اور تعلیم کے شعبوں میں نِجی خدمات سے مستفید ہونے والے سعودی شہریوں پر عائد ویلیو ایڈڈ ٹیکس VAT حکومت برداشت کرے گی۔

8 ۔ وہ شہری جو پہلی مرتبہ رہائش کے لیے مکان خریدے گا اس کی طرف سے 8.5 لاکھ ریال تک کی قیمت پر عائد ہونے والا ویلیو ایڈڈ ٹیکس VAT حکومت برداشت کرے گی۔

شاہ سلمان بن عبدالعزیز کے فرمان کے مطابق تمام سرکاری محکمے اپنے ملازمین کو ہر ماہ شمسی کیلنڈر کی 27 تاریخ کو تنخواہ دینے کے پابند ہوں گے۔ فرمان میں کہا گیا کہ مختلف خدمات کے بل تنخواہ ملنے کے اگلے ہفتے جاری ہوا کریں گے۔