.

یمن : صعدہ میں 6 حوثی کمانڈر اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کے صوبے صعدہ میں جمعرات کے روز سرکاری فوج کے ساتھ "طیبہ" کے علاقے میں ہونے والی لڑائی میں حوثی ملیشیا کے 6 کمانڈر اور 50 دیگر ارکان مارے گئے۔ کارروائی میں یمنی فوج کو عرب اتحاد کی معاونت بھی حاصل تھی۔

ہلاک ہونے والے کمانڈروں کے نام محسن محمد الغريبی ، ابو روح الله ، ابو مرتضی ، ابو جهاد الحمزی ، ابو علی الاعوج اور فهد احمد المزروعی ہیں۔

ذرائع نے العربیہ کو بتایا کہ یہ لڑائی تقریبا 5 گھنٹے جاری رہی اور اس دوران اتحادی طیاروں نے اُن عسکری گاڑیوں اور سواریوں کو تباہ کر دیا جن کو حوثی ملیشیا نے استعمال کی کوشش کی۔

اس سے قبل جمعرات کی شام یمنی فوج نے الجوف صوبے کے علاقے برط العنان میں حوثیوں کا حملہ پسپا کر دیا۔

جمعرات کی صبح عرب عسکری اتحاد نے الجوف صوبے میں حوثیوں کی عسکری گاڑیوں کو تباہ کر دیا۔ یہ گاڑیاں باغیوں کے زیر قبضہ محاذوں پر کمک لے جا رہی تھیں جس میں گولیاں اور دیگر سامان شامل تھا۔

ادھر صعدہ میں عرب اتحاد کے توپ خانوں نے وادی العطفین میں حوثیوں کے ٹھکانوں کو شدید گولہ باری کا نشانہ بنایا۔ اس کے علاوہ یمنی فوج نے 8 حوثیوں کو ہلاک کر ڈالا جو علیب کے پہاڑی سلسلے میں دراندازی کی کوشش کر رہے تھے۔

دوسری جانب سعودی افواج نے بدھ کے روز مملکت کے صوبے جازان کے علاقے الخوبہ کے مقابل حوثی ملیشیا کا ایک حملہ روک دیا۔ اس دوران سرحدی گاؤں الخوبہ پر حملے کی کوشش کرنے والے 25 حوثیوں کو موت کی نیند سلا دیا گیا۔ سعودی اپاچی فوجی ہیلی کاپٹروں اور توپ خانوں نے الخوبہ کے مقابل علاقے میں یمنی باغیوں کی عسکری گاڑیوں کو نشانہ بنایا۔