.

قذافی دور کا اہم لیبی عہدیدارجوہانسبرگ میں فائرنگ سے زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لیبیا کے مقتول لیڈر کرنل معمرقذافی کے ایک قریبی ساتھی کو جنوبی افریقا کے دارالحکومت جوہانسبرگ میں نامعلوم مسلح افراد نے گولیاں مار کر زخمی کردیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق زخمی ہونے والے بشیر صالح قذافی دور کے لیبی حکومت میں افریقی امور کے انچارج اور معمر قذافی کے اسٹاف افسر رہ چکے ہیں۔

بشیر صالح کے اہل خانہ کے ایک ذریعے کا کہنا ہے کہ سابق عہدیدار کو جوہانسبرگ میں ان کی رہائش گاہ کے قریب نامعلوم افراد نے فائرنگ کا نشانہ بنایا اور فائرنگ کے بعد وہاں سے فرار ہوگئے۔ پولیس نے موقع پر پہنچ کر جائے وقوعہ کو گھیرے میں لے لیا۔

بشیر صالح کو زخمی حالت میں اسپتال منتقل کیا گیا ہے جہاں ان کی حالت تشویشناک بیان کی جاتی ہے۔ ابھی تک یہ واضح نہیں ہوسکا کہ آیا یہ قاتلانہ حملہ تھا یا اس کے پیچھے کوئی اور مجرمانہ سوچ کار فرما تھی۔

خیال رہے کہ بشیر صالح لیبیا میں کرنل قذافی کے خلاف سنہ 2011ء کی بغاوت کے بعد فرانس اور جنوبی افریقا میں آتے جاتے رہے ہیں۔