.

’’مثبت بھونچال‘‘ برپا کرنے کے لیےسعودی عرب سے استعفے کا اعلان کیا: سعد الحریری

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

لبنانی وزیراعظم سعد الحریری نے کہا ہے کہ انھوں نے 2017ء میں سعودی عرب سے اپنے استعفے کا اعلان ڈرامائی انداز میں ایک ’’ مثبت بھونچال‘‘ پیدا کرنے کے لیے کیا تھا۔

انھوں نے یہ بات ایک اسکول کے دورے کے موقع پر ایک ٹیلی ویژن پروگرام میں گفتگو کرتے ہوئے کہی ہے۔انھوں نے انکشاف کیا ہے کہ انھوں نے لبنانی عوام اور جماعتوں میں ایک مثبت ہل چل پیدا کرنے کے لیے اپنے عہدے سے استعفا دیا تھا۔ واضح رہے کہ انھوں نے چند ہفتے کے بعد سعودی عرب سے لبنان واپسی پر اپنا استعفا واپس لے لیا تھا۔

انھوں نے یہ بھی بتایا ہے کہ وہ بہت جلد سعودی عرب کا دورہ کریں گے جہاں وہ سعودی قیادت سے ملاقاتوں کے علاوہ مختلف کانفرنسوں میں شرکت کریں گے۔وہ عرب سربراہ اجلاس میں بھی شریک ہوں گے۔

سعد الحریری نے اس گفتگو میں لبنانی فوج کی حمایت ، اس کو اسلحہ اور فوجی سازسامان مہیا کرنے کی ضرورت پر زوردیا ہے تاکہ وہ اپنے فرائض خوش اسلوبی سے انجام دے سکے۔
ان کا کہنا تھا کہ ’’ حزب اللہ کے ہتھیاروں کا معاملہ بات چیت کے ذریعے طے کیا جانا چاہیے اور اگر لبنانی فوج ہی سرحدوں کا دفاع کرے تو یہ ملک کے لیے بہتر ہوگا کیونکہ دنیا بھر میں کسی ملک کی فوج ہی اس کا دفاع کرتی ہے‘‘۔