.

مصر : صوبہ البحیرہ میں دو ٹرینوں میں تصادم ، 20 افراد ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر کے شمالی صوبے البحیرہ میں دو ٹرینوں میں تصادم کے نتیجے میں کم سے کم بیس افراد ہلاک اور متعدد زخمی ہوگئے ہیں۔

مصر کی وزارتِ صحت نے ایک بیان میں بتایا ہے کہ بدھ کے روز البحیرہ میں ایک مسافر ٹرین اور ایک مال گاڑی آپس میں ٹکرائی ہیں۔فوری طور پر اس ٹرین حادثے کی اصل وجہ معلوم نہیں ہوسکی ہے۔

مصر میں اس حادثے سے قبل اگست 2017ء میں ساحلی شہر اسکندریہ میں مسافر ٹرین کے ایک حادثے میں اکتالیس افراد ہلاک ہو گئے تھے۔ نومبر 2012ء کے بعد مصر میں یہ بدترین ٹرین حادثہ تھا۔تب دارالحکومت قاہرہ سے 360 کلومیٹر جنوب میں واقع منفلوط میں ایک ریلوے کراسنگ پر بچوں کی بس سے ایک ٹرین ٹکرا گئی تھی اور اس کے نتیجے میں چار سے بارہ سال کی عمر کے سینتالیس بچوں سمیت باون افراد جاں بحق ہوگئے تھے۔

اس حادثے کے الزام میں ریلوے کے دو ملازمین کو فرائض سے غفلت اور بچوں کے قتل عام کے الزام میں جون 2013ء میں مصر کی ایک عدالت نے قصوروار قرار دے کر دس سال قید کی سزا سنائی تھی اور ان پر ایک ایک لاکھ مصری پاؤنڈ جرمانہ عاید کیا تھا۔مصر کی ایک اعلیٰ عدالت نے ان دونوں ملازمین کی یہ سزا برقرار رکھی تھی۔

مصر میں ریلوے ٹریک ناکارہ ہونے ،ملازمین کی فرائض سے غفلت اور دیگر مسائل کی وجہ سے آئے دن حادثات پیش آتے رہتے ہیں۔2002ء میں سب سے تباہ کن ریل حادثہ پیش آیا تھا اور ایک مسافر ٹرین میں آتشزدگی کے نتیجے میں 373 افراد ہلاک ہوگئے تھے۔