.

مصر : ٹی وی پروگرام کے میزبان خیری رمضان زیر حراست !

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

مصر میں اسغاثہ نے ٹیلی وژن کے چینل وَن پر "مصر النھاردہ" پروگرام کے میزبان خیری رمضان کو تحقیقات کے لیے 4 روز زیر حراست رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔ خیری پر پولیس کو گزند پہنچانے کا الزام ہے۔

مصری وزارت داخلہ کی جانب سے اطلاع دی گئی تھی کہ خیری نے اپنے پروگرام کی ایک قسط میں پولیس افسران اور اتھارٹی کی اہانت کی اور جھوٹی خبر نشر کی۔

خیری رمضان نے چند روز قبل اپنے پروگرام کے دوران ایک پولیس افسر کی بیوی کی جانب سے موصول ہونے والے خط کا ذکر کیا تھا۔ خط میں خاتون نے بتایا کہ پولیس افسران کی کم تنخواہوں کے سبب وہ اور دیگر افسران کی بیویوں کو بچوں کے اسکول کے اخراجات برداشت کرنے میں شدید مسائل کا سامنا ہے۔ خاتون کے مطابق وہ اپنے گھرانے کے اخراجات کا بوجھ بانٹنے کے لیے کام کرنے کے بارے میں سوچ رہی ہے۔ مصری وزارت داخلہ نے اس امر کا شدید نوٹس لیتے ہوئے خیری رمضان کو پولیس افسران اور ان کے اہل خانہ کی اہانت کا مرتکب ٹھہرا دیا۔

دوسری جانب مصر میں پولیس افسران کی بیگمان کی انجمن کی سربراہ ڈاکٹر رشا کامل نے العربیہ ڈاٹ نیٹ سے گفتگو میں بتایا کہ "مصری میزبان نے پروگرام کے دوران ہوا کے دوش پر جو نشر کیا اس نے پولیس افسران کی بیگمات کو شدید گزند پہنچائی ہے۔ مذکورہ میڈیا پرسن کی جانب سے جھوٹی خبر گھڑنے سے پولیس افسران کا مورال تباہ ہو گیا جو اس وقت دہشت گری کے خلاف معرکہ آرائی میں مصروف ہیں"۔

ادھر عدالت مرافعہ کے وکیل سمیر صبری نے العربیہ ڈاٹ نیٹ کو بتایا کہ جھوٹی خبر نشر کرنے اور سرکاری ملازم کی اہانت کے الزام میں خیری رمضان کو 3 سال جیل کی سزا ہو سکتی ہے۔