.

شمالی نھم میں حوثی آخری ٹھکانے سے بھی محروم

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

یمن کی سرکاری فوج نے دارالحکومت صنعاء کے مشرق میں واقع نھم ڈاریکٹوریٹ میں حوثیوں کو ان کے آخری ٹھکانے سے بھی نکال باہر کرتے ہوئے اسے باغیوں سے چھڑالیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق یمنی فوج کی طرف سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ فوج نے یام پہاڑی سلسلےمیں واقع نھم کے محاذ کے مبینہ ٹھکانے سے حوثی باغیوں کو نکال باہر کیا ہے۔

میمنہ سے حوثی باٰغیوں کو نکالنے کے لیے گھمسان کی جنگ ہوئی۔ اس کے بعد سرکاری فوج اور اس کی حامی فورسز نے شمالی ضبوعہ کی آخری گھاٹی سے بھی باغیوں کا محاصرہ کرلیا گیا ہے۔

مجامیع کے مقام پر لڑائی کے دوران دو اہم سرکردہ باغیوں سمیت 13 جنگ جو ہلاک ہوگئے۔

دوسری جانب مشرقی نھم میں قطبین چوک اور مغربی الصافح میں عرب اتحادی طیاروں کی بمباری کے نتیجے میں باغیوں کے متعدد ٹھکانے اور گاڑیاں تباہ ہوگئیں۔

اتھادی طیاروں نے مغربی ضبوعہ میں بھی حوثی ملیشیا کے متعدد ٹھکانوں پر بمباری کی، جس کے نتیجے میں متعدد باغی ہلاک اور زخمی ہوگئے۔ شمال مشرقی صنعاء میں رحب ڈائریکٹوریٹ ھران ارحب،الجوف ارحب اور نھم ارحب میں بھی باغیوں کے ٹھکانوں پر بمباری کی گئی۔