عراق: کردستان کے دونوں ہوائی اڈّے بین الاقوامی پروازوں کے لیے دوبارہ کھولنے کا فیصلہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

عراقی وزیراعظم حیدر العبادی نے منگل کے روز عراقی کردستان میں اربیل اور سلیمانیہ کے ہوائی اڈوں کو بین الاقوامی پروازوں کے لیے پھر سے کھولنے کا اعلان کیا ہے۔ سرکاری بیان کے مطابق یہ پیش رفت کردستان حکومت کی جانب سے وفاقی حکومت کے اختیارات تسلیم کرنے پر آمادگی ظاہر کرنے کے بعد سامنے آئی ہے۔

بیان میں بتایا گیا ہے کہ کردستان کے ہوائی اڈوں کے خصوصی تحفظ کے واسطے ایک ڈائریکٹریٹ کے قیام کا فیصلہ کیا گیا ہے جس کی قیادت اور کنٹرول وفاقی وزارت داخلہ کے ہاتھ میں ہو گا۔

اس طرح بغداد کی جانب سے ستمبر 2017ء کے اواخر میں اربیل اور سلیمانیہ کے ہوائی اڈوں پر بین الاقوامی پروازوں کی آمد و رفت پر عائد کی جانے والی پابندی ختم ہو گئی ہے۔ یہ پابندی کردستان حکومت کی جانب سے ریجن کے مستقبل کے حوالے سے کرائے جانے والے ریفرینڈم کے چند روز بعد عائد کی گئی تھی۔ بغداد حکومت نے مذکورہ ریفرینڈم کو غیر قانونی شمار کیا تھا۔

عراقی وزیراعظم کے دفتر کے ترجمان سعد الحدیثی نے بتایا کہ "پابندی اٹھائے جانے کا فیصلہ آئندہ چند روز میں نافذ العمل ہو جائے گا"۔

یاد رہے کہ 25 ستمبر کے ریفرینڈم سے قبل کردستان کے ان دونوں ہوائی اڈوں کے انتظامی امور ریجن کی حکومت کے ہاتھ میں تھے جس کو خود مختاری حاصل ہے۔ بعد ازاں بغداد میں مرکزی حکومت نے مطالبہ کیا تھا کہ دونوں ہوائی اڈوں اور سرحدی گزر گاہوں کے اختیارات اس کے حوالے کر دیے جائیں۔ اس طرح کردستان سے بیرون ملک جانے والی تمام پروازوں کے لیے بغداد سے گزر کر جانا لازم ہو گیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں