.

الغوطہ الشرقیہ: جنگجوؤں کے انخلاء کے بعد "حموریہ" پر شامی فوج کا کنٹرول

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

شام میں انسانی حقوق کی آبزرویٹری کے مطابق شامی حکومت کی فوج نے جمعرات کے روز الغوطہ الشرقیہ کے جنوبی حصّے میں واقع اہم ترین قصبے حموریہ پر کنٹرول حاصل کر لیا ہے۔ یہ پیش رفت علاقے کے دوسرے نمایاں ترین گروپ "فيلق الرحمن" کے جنگجوؤں کے انخلاء کے بعد سامنے آئی ہے۔

انسانی حقوق کی آبزرویٹری نے بتایا ہے کہ اس طرح شامی حکومت کی فوج نے الغوطہ الشرقیہ کے 70% سے زیادہ رقبے کا کنٹرول سنبھال لیا ہے۔

شامی حکومت کی فوج کئی روز کی شدید بم باری اور مقامی آبادی کے ہزاروں افراد کی نقل مکانی کے بعد بدھ کے روز قصبے میں داخل ہو گئی تھی۔ المرصد کے مطابق جمعرات کے روز 12 ہزار سے زیادہ افراد حموریہ اور اس کے نواحی قصبوں سے نکل کر شامی حکومت کی فوج کے زیر کنٹرول علاقوں کی جانب کوچ کر گئے۔

یاد رہے کہ شامی حکومت کی فوج 18 فروری سے الغوطہ الشرقیہ پر شدید اور وحشیانہ حملے کر رہی ہے۔ اس کے نتیجے میں المرصد کے مطابق اب تک 1249 شہری جاں بحق ہو چکے ہیں جن میں 252 بچّے شامل ہیں۔