حوثی باغیوں نے فٹ بال کھلاڑی قتل اور دانشور اغواء کرلیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

یمن کے حوثی باغیوں نے الحدیدہ گورنری میں ایک کارروائی کے دوران ایک مقامی فٹ بالر کو قتل جب کہ ذمار سے ایک اسکالر کو اغواء کے بعد نامعلوم مقام پر منتقل کردیا۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق ہلال ساحلی کلب کے فٹ بالر عبداللہ بزاز کو گذشتہ منگل کو مغربی الحدیدہ میں گولیاں مار کر قتل کیا گیا۔

یمن کے عسکری ذریعے کا کہنا ہےکہ ایک حوثی شدت پسند کمانڈر فتح اللہ الریمی المعروف ’ابو المعارک‘ نے ہلال ساحلی کلب کے فٹ بالر عبداللہ بزاز کو ان کے گھر کے سامنے گولیاں ماریں جس کے نتیجےمیں اس کی موت واقع ہوگئی۔

ادھر یمن کے ایک دوسرے فیلڈ ذرائع کا کہنا ہے کہ حوثی ہر اس شہری کو موت کے گھاٹ اتار دیتے ہیں۔

ادھر ایک دوسرے ذرائع کے مطابق حوثی باغیوں نے ذمار گورنر میں ایک مقامی اسکالر اور مصنف عبدالکریم الرازحی کواس کے چار ساتھیوں سمیت اغواء کرلیا۔ مقامی ذرائع کے مطابق حوثی باغیوں نے عبدالکریم الرازحی اور اس کے چار ساتھیوں کو اغواء کیا۔ ان کے موبائل فون ان سے چھین لیے۔ ان کے ساتھ اہل خانہ کا کوئی رابطہ نہیں ہو سکا ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں