سیف الاسلام صدارتی انتخابات کے لیے پرعزم، اصلاحات کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

لیبیا کے مقتول لیڈر معمر قذافی کے صاحبزادے سیف الاسلام القذافی نے ملک میں ہونے والے صدارتی انتخابات میں بڑھ چڑھ کر حصہ لینے اور ملک میں اصلاحات کا نیا نظام متعارف کرنے کے عزم کا اظہار کیا ہے۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ کے مطابق لیبیا میں صدارتی انتخابات سے چھ ماہ قبل سیف الاسلام قذافی نے کہا ہے کہ وہ مستقبل کا نیا ویژن پیش کریں گے اور تمام شعبوں میں جامع اصلاحات کا نظام متعارف کرائیں گے۔

سیف الاسلام نے اپنے سیاسی اور اصلاحاتی پروگرام کی نگرانی کے لیے ایمن ابو راس کو ذمہ داری سونپی ہے۔

سابق مقتول لیبی لیڈر کے بیٹے کے صدارتی انتخابات میں حصہ لینے سے متعلق اعلان کے حوالے سے بات کرتے ہوئے انسانی حقوق کے رہ نما خالد الغویل نے کہا کہ سیف الاسلام ملک میں جامع اصلاحات لانے کا ارادہ رکھتے ہیں۔

العربیہ ڈاٹ نیٹ سے بات کرتے ہوئے الغویل نے کہا کہ سیف الاسلام لیبیا کو موجودہ انارکی سے نکالنے، قومی مصالحت اور پورے لیبیا کو متحد کرنے کے لیے سیاسی پروگرام پیش کرنا چاہتے ہیں۔

خیال رہے کہ مقتول کرنل معمر قذافی کے دوسرے بیٹوں کے برعکس سیف الاسلام القذافی جیل سے رہائی کے بعد سیاسی سرگرمیوں میں حصہ لینے کے بیانات جاری کرتے رہے ہیں مگرعملی طور پر وہ تاحال سیاسی اکھاڑے میں نہیں اترے۔ انہیں گذشتہ برس پارلیمنٹ کی جانب سے قذافی دور کے قید کیے گئے افراد کے عام معافی کے قانون کے بعد جیل سے رہا کیا گیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں