.

غزہ میں اسرائیلی فوجیوں کی فائرنگ سے زخمی فلسطینی صحافی شہید

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

غزہ کی سرحد پر جمعہ کو اسرائیلی فوجیوں کی فائرنگ سے شدید زخمی ہونے والا نوجوان فلسطینی صحافی دم توڑ گیا ہے۔

31 سالہ شہید صحافی یاسر مرتضیٰ غزہ میں قائم عین میڈیا ایجنسی کے لیے فوٹو گرافر کے طور پر کام کررہے تھے۔ وہ اسرائیلی فوجیوں کی فائرنگ سے شدید زخمی ہوگئے تھے اور انھیں اسپتال منتقل کیا گیا تھا جہاں وہ ہفتے کے روز چل بسے ہیں۔

اسرائیلی فوجیوں نے گذشتہ روز بھی فلسطینی مظاہرین پر ایک مرتبہ پھر اندھا دھند فائرنگ کی تھی جس سے مزید نو فلسطینی شہید ہوگئے تھے۔ مظاہرین نے اسرائیلی فوجیوں کی نظروں سے بچنے کے لیے اپنے احتجاج کے دوران میں بڑی تعداد میں ٹائروں کو آگ لگا دی تھی جس سے ہر طرف دھویں کے بادل دکھائی دے رہے تھے۔

گذشتہ آٹھ روز کے دوران میں اسرائیلی فوجیوں کی غزہ میں مظاہرین پر فائرنگ اور دوسرے حملوں میں اکتیس فلسطینی شہید ہوچکے ہیں ۔

غزہ کی وزارت صحت کے مطابق گذشتہ روز مظاہروں کے دوران میں12 خواتین اور 48 کم سن بچوں سمیت 1070 افراد زخمی ہوئے تھے۔ان میں 293 براہ راست گولیاں لگنے سے زخمی ہوئے تھے ۔ان شدید زخمیوں میں 25 کی حالت تشویش ناک بتائی جاتی ہے۔